میں اپنی تمام تر صلاحیتں اور وسائل لوگوں کی ترقی اور خوشحالی پر خرچ کرونگا ،نو منتخب ایم پی اے سراج الدین خان

0

میں عوام کی خدمت کو عبادت سمجھتا ہو ۔۔ میں اپنی تمام تر صلاحیتں اور وسائل لوگوں کی ترقی اور خوشحالی پر خرچ کرونگا ۔۔ حلقہ پی کے 102 باجوڑ 3 سے نو منتخب ایم پی اے سراج الدین خان کا اعلان

خار باجوڑ ( رپورٹ انواراللہ خان )  صوبائی اسبملی کے حلقہ پی کے 102 باجوڑ 3 سے جماعت اسلامی کے نومنتخب ممبر صوبائی اسبملی ( ایم پی اے ) سراج الدین خان نے کہاہے کہ وہ اپنی تمام تر صلاحیتں علاقہ کی ترقی اورلوگوں کی  خوشحالی کے لیے بروئے کار لائیں گے اور اپنے حلقہ کو پورے قبائلی اضلاع میں مثالی علاقہ بنائیں گے ۔۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے باجوڑ ٹائمز کے میزبان انواراللہ خان کے ساتھ اپنے رہائش گاہ نویکلی میں ایک خصوصی انٹرویو کے دوران کیا ۔ سراج الدین خان نے کہاکہ میں نہ صرف اپنے حلقہ – پی کے 102 کا ایم پی ہو بلکہ تمام باجوڑ کے لوگوں کا ایم پی اے ہو  اور عوام نے مجھ پر جو اعتماد کیا ہے وہ میرے لیے باعث فخر ہے ۔

سراج الدین خان نے کہا کہ میرا مشن اپنے حلقہ کے عوام کی بلا امیتاز خدمت ہے اور میں اپنی تمام تر صلاحتیوں اور وسائل کو اپنے لوگوں کی ترقی اور خوشحالی کے لیے بروئے کار لاونگا ۔۔ سراج الدین خان نے کہاکہ میں کسی پارٹی ۔ قوم۔ یا علاقہ کا نہیں بلکہ سارے باجوڑ کا ایم پی اے ہو اور لوگوں کے معیار زندگی بہتر بنانے کے لیے ایسے کام کرونگا جواب تک کسی نے نہیں کیا ہو ۔ نو منتخب ایم پی اے نے کہاکہ وہ اجتماعی کاموں کی طرف خصوصی توجہ دیں گے  کیوں کہ بقول ان کے ماضی کے پارلیمنٹرین نے اجتماعی کاموں کی بجائے ترقیاتی فنڈز مخصوص افراد پر خرچ کی ہے ۔

سراج الدین خان نے کہاکہ  وہ اپنے عہدہ ( ایم پی اے ) کو اپنے زاتی فائدہ کے لیے نہیں بلکہ عوام کے خدمت کے لیے استعمال کریں گے کیونکہ بقول ان کے انہیں کسی چیز کی ضرورت نہیں ۔

نو منتخب ایم پی اے نے کہاکہ تمام ترقیاتی منصوبے عوام کے صلاح و مشورےسے کی جائیں گے اور اس مقصد کے لیے پولنگ اسٹیشن کی سطح پر ہر علاقہ میں کمیٹیاں قائم کی جائیں گے تاکہ ترقیاتی فنڈز خالصتاً میرٹ اور شفاف طریقے سے خرچ ہوسکیں ۔

انھوں نے کہاکہ انہیں علاقہ کے لوگوں کے مسائل اور مشکلات کا احساس ہے اور وہ کوشش کریں گے کہ سرکاری فنڈز کے علاوہ اپنے وسائل کا ایک خطیر حصہ لوگوں کو بنیادی ضروریات کی فراہمی پر خرچ کریں گے ۔

ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہاکہ میں نے الیکشن کمپین میں اپنے حلقہ کے عوام کے ساتھ جو وعدے کئے تھے انہیں ہر صورت میں پائہ تکمیل تک پہنچاونگا کیونکہ وہ صرف زبانی جمع خرچ پر نہیں بلکہ عملی کام پر یقین رکھتے ہیں ۔ سراج الدین خان نے مزید کہاکہ وہ نہ صرف علاقہ کی ترقی اور خوشحالی پر خصوصی توجہ دیں گے بلکہ اسبملی میں عوام کے مسائل اور مشکلات پر بھر پور اورشاندار طریقہ سے اواز اٹھائیں گے اور ثابت کرونگا کہ ایک ایم پی اے کس طریقہ سے عوام کے مشکلات اور مسائل پر اواز اٹھاتے ہیں ۔

نو منتخب ایم پی اے نے کہاکہ حلقہ پی کے 102 کے تمام علاقوں میں اپنے وسائل سے پینے کی صاف پانی کی فراہمی کے منصوبوں پر دس دن کے اندر اندر کام شروع ہوجائے گا تاکہ لوگوں کو پینے کی صاف پانی کی فراہمی یقینی بنایا جاسکیں ۔

نو منتخب ایم پی اے کا مزید کہنا تھا کہ وہ  قبائلی اضلاع کے تمام ایم پی ایز خو ان کا تعلق حکومتی پارٹی سے ہو یا  اپوزیشن سے ایک پیج ( صفحہ) پر لائیں گے اور انہیں قائل کریں گے کہ وہ  اپنے اپنے علاقوں کی ترقی اور خوشحالی کے لیے عملی اقدامات اٹھائیں ۔

دریں اثناء اج بروز بدھ اپنے رہائش گاہ پر پاکستان تحریک انصاف نظریاتی گروپ تحصیل ماموند کے ایک وفد جس کی سربراہی حلقہ پی کے 102 کے ازاد امیدوار حاجی رحیم داد خان کررہے تھے کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے نو منختب ایم پی اے نے کہاکہ میں تمام لوگوں کو ساتھ لے کر چلونگا کیونکہ اب میں کسی ایک پارٹی یا علاقہ کا نہیں بلکہ اپنے پورے حلقہ کا ایم پی اے ہو ۔ انھوں نے وفد کی ارکان کو انہیں مبارکباد دینے کے لیے ان کی رہائش گاہ امد پر ان کا زبردست شکریہ ادا کیا اور ان کے اس عمل کو سراہا ۔ سراج الدین خان نے کہاکہ سیاست ۔ جنگ اور جھگڑے کا نام نہیں بلکہ عوام کی خدمت کا نام ہے مگر بدقسمتسی سے بعض لوگوں نے سیاست کو اپنی انا اور زاتی مفادات کے لیے استعمال کیاہے۔ نو منتخب ایم پی اے نے

حلقہ این اے 41 کے ایم این اے کا نام لیے بغیر کہاکہ ان لوگوں کا دماغی توازن خراب ہے اور ان کو ڈاکٹر کے پاس جانا چاہیے۔

اس موقع پر سراج الدین خان نے  باجوڑسے  قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 41 سے پاکستان تحریک انصاف کے ممبر قومی اسمبلی کو چلینج دیتے ہوے کہاکہ ۔” اپ اپنے قومی اسمبلی کے سیٹ سے استعفیٰ دیں ۔ میں اپنے سیٹ سے استعفیٰ دونگا اور دونوں سیٹوں پر دوبارہ الیکشن کرائے جائے ۔۔ تاکہ دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.