ایجنسی میں لوڈشیڈنگ اور عملے کی کمی کے باعث متاثرین کا کام کھٹائی میں پڑھ جاتا ہے۔وحید زمان ملنگ

0

باجوڑ بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے ہزاروں اے ٹی ایم کارڈ بلاک۔کارڈز ویریفیکیشن میں مشکلات۔ویریفیکیشن کیلئے کئی مرتبہ ضلع دیر اور ایجنسی آفس کا چکر لگانے پر مجبور ہیں ۔ ان خیالات کا اظہار پاک سرزمین پارٹی کے صدر ملک وحید زمان نے باجوٹ ٹائمز ٹاک شو میں کرتے ہو ے کہا کہ بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کی ذیادہ تر اے ٹی ایم کارڈ بلاک ہونے کیوجہ سے متاثرہ عوا م شدید ذہنی اذیت کا شکار ہیں اور وہ تیمر گرہ اور ایجنسی آفس کے چکر لگانے پر مجبور ہیں متاثرین کا کہنا ہے کہ کارڈ بلاک ہونے کی صورت میں ہم کوکئی مرتبہ تیمر گرہ ضلع دیر جانے پر مجبور ہوتے ہیں اور وہاں ویریفیکیشن کروا کر ایجنسی کے آفس میں رجسٹرڈ کرنا پڑتا ہے لیکن یہاں آکر عملہ انتہائی غفلت برتا ہے اور ہمارا ویریفیکیشن مہینوں بعد بھی نہیں ہوتا ہے دوسری طرف بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے عملے کا کہنا ہے کہ ایجنسی میں عملے کی کمی اور بجلی لوڈشیڈنگ کیوجہ سے ہم متاثرین کا کام صحیح طریقے سے نہیں نمٹا سکتے ہیں اور ایجنسی کی آبادی سولہ لاکھ سے ذیادہ ہے اس لئے ان کی کارڈ ویریفیکیشن میں مر کز سے تاخیر ہوتا ہے جو یہ کام ہمارے ایجنسی آفس کے بس سے باہر ہوتا ہے متاثرین نے چیئر پرسن ماروی میمن، فاٹا سیکرٹریٹ باجوڑ ایم این ایز اور پولٹیکل ایجنٹ سے بھر پور مطالبہ کیا ہے کہ ایجنسی میں بینظیر انکم سپورٹ کے دفتر کو فعال بنا یا جائے اور اس میں بجلی ، کمپیوٹرسسٹم کے نظام کو فعال اور آفس عملے کو ذیادہ کیا جائے تاکہ ایجنسی کے متاثرین کے مشکلات کو ختم کیا جا سکے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.