مولانا نورالحق کون !

0

مولانا نورالحق ولد سید نورالدین25مئی 1987 ؁ء کو باجوڑ ایجنسی تحصیل خار کے گاؤں شریف آباد (حاجی لونگ) میں پیدا ہوئے، ابتدائی تعلیم گورنمنٹ پرائمری سکول حاجی لونگ سے حاصل کی ، مڈل تعلیم کے بعد جامعۃ العلوم الاسلامیہ تنگی پائین جندول میں درجہ اولیٰ پڑھ کر جامعہ مدینۃالعلوم نوے کلے باجوڑ ایجنسی میں درجہ عالیہ تک تعلیم حاصل کی اپنے استاذہ کرام کے مشورے پر اعلیٰ تعلیم حاصل کرنے کے لئے ملک کے مشہور ومعروف ادارہ جامعہ دارالعلوم کراچی میں داخلہ لیا اور وہاں سے شیخ الاسلام حضرت مفتی محمدتقی عثمانی دامت برکاتھم العالیہ جیسے اکابر کے زیر سایہ درجات علیاء اور دورۃ الحدیث مکمل کرکے حضرت مولانا مفتی محمد تقی عثمانی اور مفتی اعظم پاکستان حضرت مولانا مفتی رفیع عثمانی دامت برکاتھم العالیہ کے دست اقدس سے دستارفضیلت اور سند فراغت حاصل کی۔ دینی تعلیم کے ساتھ ساتھ بورڈ اف انٹرمیڈیٹ آف کراچی سے میٹرک کرکے بورڈاف سیکنڈری ایجوکیشن ملاکنڈ سے ایف اے کے امتحان میں پوری بورڈ کے سطح پر تیسری پوزیشن حاصل کی، جبکہ فراغت کے بعد علم دینی آگے نسل کو منتقل کرکے اپنے اسلاف کے طرز پر مادر علمی جامعہ مدینۃ العلوم میں درس وتدریس کا سلسلہ شروع کردیا اور درجہ ثالثہ تک کتب کی درس سے ابتداء کی۔ علمی استعداد کو بڑھانے کے لئے ایک دفعہ پھر رختِ سفر باندھ کر ایگریکلچریونیورسٹی پشاورکے شعبہ اسلامیات میں ایم فل میں داخلہ لیا اور دوسال کے مدت میں وہاں سے ایم فل مکمل کی۔ ایم فل مکمل کرنے کے بعد دوبارہ جامعہ مدینۃ العلوم میں درس وتدریس کا سلسلہ شروع کردیا۔ فراغت کے بعد مختلف رسالوں میں (ماہنامہ الصفہ اسلام آباد، ماہنامہ نویدسحر، ماہنامہ کیمور باجوڑ ) میں مضمون لکھتے رہے، حال ہی میں باجوڑ ٹائمز کے ساتھ منسلک ہوگئے اورانشاء اللہ باجوڑ ٹائمز کے لئے مستقل بنیاد پر مضمون تحریرکرتے رہیں گے ۔ (ادارہ باجوڑ ٹائمز )

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.