چترال میں دو مزید ٹیسٹ پازیٹیو آگئے۔ کرونا وائریس کی مریضوں کی تعداد 19 ہوگئی۔

0

چترال(گل حماد فاروقی) چترال میں دو مزید مریضوں کا ٹیسٹ پازیٹیو آگیا جس سے کرونا وائریس کی مریضوں کا تعداد 19 ہوگئی۔  محکمہ صحت کے ترجمان پبلک ہیلتھ کو آرڈینیٹر ڈاکٹر نثار اللہ کے مطابق  دو مزید مریضوں کا ٹیسٹ مثبت آگیا  جس سے چترال میں کرونا وائریس کی مریضوں کی تعداد انیس ہوگئی۔

محکمہ صحت کے  ترجمان کے مطابق شیر حیدر ولد شیر افسر عمر 23 سال سکنہ کاری چترال کا ٹیسٹ بھی پازیٹیو آگیا جسے آئی سو لیشن یونٹ منتقل کیا گیا اسی طرح فضل رزاق ولد غلام فاروق  سکنہ چمرکن عمر 19 سال کا ٹیسٹ بھی پازیٹیو آگیا اور اسے بھی آئی سولیشن یونٹ منتقل کیا گیا۔  فضل رزاق صوبہ سندھ کے ضلع شکار پور سے آیا تھا اور  اور گورنمنٹ کالج آف کامرس کے ہاسٹل  کے قرنطینہ مرکز میں تھا  جہاں عام طور پر یہ تاثر پایا جاتا ہے کہ صحت مند لوگوں کو بھی کرونا وائریس لگ جاتا ہے۔ جبکہ شیر حید پشاور سے آیا تھا اور وہ بھی ہاسٹل نمبر2 کے قرنطینہ مرکز میں تھا۔

اسی طرح چترال میں کرونا وائریس کے مریضوں کی تعداد 19 ہوگئی۔ واضح رہے کہ چار مریضوں کا ٹیسٹ منفی  آیا ہے اور ان کا دوبارہ ٹیسٹ کیا جائے گا اور اب کے بار بھی ان کا ٹیسٹ نیگیٹیو آیا تو ان کو ہسپتال سے فارغ کیا جائے گا۔ واضح رہے کہ چترال کے ہسپتالوں میں کرونا وائیرس کی مریضوں کی علاج معالجے کیلئے ونٹی لیٹرز اور دیگر سامان نہ ہونے کے برابر ہیں۔ جبکہ دوسری طرف سیاسی اور سماجی طبقہ فکر چترال میں کامرس کالج کے  ہاسٹل میں  قرنطینہ مرکز پر تحفظات کا اظہار کررہے ہیں جہاں حد سے زیادہ لوگو ں کو رکھا گیا ہے اور چار درجن لوگوں کیلئے صرف چار واش روم ہیں جس میں صحت مند لوگوں کو بھی کرونا وائریس لگنے کا حطرہ ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.